سعودی عرب میں کرفیو کا اعلان کر دیا گیا

ریاض (ویب ڈیسک) سعودی مملکت میں کورونا کی وبا پر قابو نہیں پایا جا سکا۔ اس موذی مرض کے متاثرین کی گنتی چھ سو سے زائد ہو گئی ہے، صرف دو روز کے اندر متاثرین کی گنتی میں 200 کیسز کے اضافے نے سعودی حکام کو سخت فیصلے لینے پر مجبور کر دیا ہے۔ جس کے بعد سعودی مملکت میں 21 روز کے لیےکرفیو کا اعلان کر دیا گیا ہے۔ سعودی فرمانروا نے اعلان کیا ہے کہ آ ج رات سوموار سے مملکت بھر میں کرفیو لگایا جائے گا۔ العربیہ نیٹ نیوز کے مطابق خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے مملکت میں کرونا وائرس کی روک تھام کے لیے رات کے کرفیو کا اعلان کیا ہے۔ سعودی عرب میں رات سات بجے سے صبح چھ بجے تک کرفیو برقرار رہے گا۔ شاہ سلمان کے اس فیصلے پرعمل درآمد کا آغاز آج سوموار کی رات سے کر دیا گیا ہے۔ سعودی پریس ایجنسی ‘ایس پی اے’ نے بتایا کہ شاہ سلمان بن عبد العزیز آل سعود نے شہریوں اور ملک میں مقیم غیرملکی باشندوں کی کرونا وائرس سے بچاؤ کے لیے سخت حفاظتی انتظامات کیے ہیں۔بیان میں کہا گیا ہے کہ شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے 28 رجب المرجب بہ مطابق 23 مارچ 2020ء اکیس روز تک رات کا کرفیو لگا دیا ہے۔ وزارت داخلہ کو ملک میں کرفیو کے اعلان پرعمل درآمد کو یقینی بنانے کے لیے اقدامات کرے گی۔ تمام سول اور فوجی ادارے وزارت داخلہ سے تعاون کے پابند ہوں گے۔ سرکاری اور نجی شعبوں کیملازمین کو کرفیوکی پابندی سے مستثنیٰ ہوں گے۔ سیکیورٹی ، فوجی اور میڈیا شعبوں کے ملازمین، صحت اور بنیادی سروس فراہم کرنے والے اداروں کے کارکن بھی اس پابندی سے مستثنیٰ ہوں گے۔ واضح رہے کہ سعودی عرب میں کرونا سے چھ سو کے قریب افراد متاثر ہونے کی تصدیق کی جا چکی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں