سینئر صحافی جنید سلیم نے ذاتی مفاد والوں کو لتاڑ کر رکھ دیا

اسلام آباد (ہاٹ لائن نیوز) سینئر صحافی اور ہوسٹ جنید سلیم نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے لکھا کہ” ایفٹیف قانونسازی اپوزیشن سے ملکر ہوسکتی ہے! جس پر مطالبہ کیا کہ 1 ارب تک کی کرپشن نیب سے مستثنی قرار دی جائے ایفٹیف میں پہنچانے والے بھی یہ خود تھے اور اس مطالبے پر انکو رتی برابر شرمندگی نہیں ہوئی بلکہ یہ مطالبہ عوام کو کیوں بتایا اسکا دکھ ہے ذاتی مفاد ملک سے بڑھکر ہیں انکو”۔ اس سے قبل انہوں نے اپنے پیغام جاری کیا جس میں لکھا کہ” کسی بھی قدرتی آفت سے نپٹنے اور ملکی معیشت کو بہتر کرنے کیلیے اوورسیز پاکستانیوں کا معیشت بہتر کرنے کیلیے پاکستان ڈالر بھیجنے کا بہت شکریہ مگر خبردار جو پاکستان آکر اس ملکی خدمت کرنے کا سوچا بھی کیونکہ تم لوگ دوہری شہریت کے حامل ہو”۔ ان کے پیغامات پر ٹوئٹر صارفین نے مختلف انداز میں رد عمل دیا۔ احمد حسن نامی صارف نے لکھا کہ ” کامران شاھد کے پروگرام میں بھی اس 1 ارب کی کرپشن کی بات ہوتی رہی وہاں PTI کے علی محمد، PPP کی پلوشہ اور PMLN کے محمد زبیر تھے دونوں نے پوچھا دکھائیں کہاں اپوزیشن نے 1 ارب تک کرپشن سے مستثنی کا کہا ہے آپ کے پاس ڈاکومنٹ ہیں نا شو کریں علی محمد بھی چپ رہے انھوں نے بھی کچھ نہیں کہا”۔ محمد اصغر چوہدری نامی صارف نے لکھا کہ” کامران شاھد کے پروگرام میں بھی اس 1 ارب کی کرپشن کی بات ہوتی رہی وہاں PTI کے علی محمد، PPP کی پلوشہ اور PMLN کے محمد زبیر تھے دونوں نے پوچھا دکھائیں کہاں اپوزیشن نے 1 ارب تک کرپشن سے مستثنی کا کہا ہے آپ کے پاس ڈاکومنٹ ہیں نا شو کریں علی محمد بھی چپ رہے انھوں نے بھی کچھ نہیں کہا”۔ ” غم تو یہی ھے کہ اب تک عوام کا غمخوار سواۓ بھٹو کے اور وہ بھی اپنے مفاد میں کوٸی نہی آیا اگر ایک بھی آیا ھوتا تو ھم ان باتوں کے علاوہ کوٸی اور ٹاپک پر بات کر رھے ھوتے اور آج ھم چوروں ڈاکوں لٹیروں کا ماتم نھی کررھے ھوتے مجھے نہی لگتا یہ آسانی سے پیچھا چھوڑ جاٸیں گے”۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں