بریکنگ نیوز: چوہدری پرویز الہیٰ وزیراعظم عمران خان سے ناراض۔۔۔ جلد کیا بڑی تبدیلی آنے والی ہے؟ سینئر صحافی عارف نظامی کی دنگ کر ڈالنے والی پیشگوئی

لاہور(ہاٹ لائن نیوز) پیپلز پارٹی کے رہنما چودھری منظور احمد نے کہاہے ہر ادارے کی آئینی حدود ہے ،وہ اس میں رہے ۔ ماضی میں عمران خان کے مزارقائد جانے پر جو ہلڑ بازی ہوئی وہ تو کسی کو یاد نہیں، ہم صفدر کی گرفتاری کی مذمت کرتے ہیں ۔پروگرام ہوکیارہاہے میں میزبان فیصل عباسی سے گفتگو میں انہوں نے کہا گرفتار کرنے والے پی ڈی ایم میں دراڑ نہیں ڈال سکتے، یہ طوفان بدتمیزی ہے جس سے چیزیں ٹھیک نہیں خراب ہونگی۔ وزیر اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہا ن نے کہا انہوں نے عجیب تماشا لگایا ہوا ہے ،پیپلزپارٹی نے ان سے ڈبل گیم کھیلی ہے ، پریس کانفرنس میں بلاول بھٹو اور مراد علی شاہ کیوں غائب تھے ، یہ پیپلزپارٹی کی کارروائی ہے ، ان کے پاس کیا ثبوت ہیں پولیس دروازہ توڑ کر اندر داخل ہوئی، جس طرح بندر کو مداری نچاتا ہے اسی طرح بیگم صفدر اعوان نے اپنے شوہر کو نچوایا،یہ ساری دنیا کے سامنے مزار قائد کی بے حرمتی کرتے اور پھر ٹی وی چینلز پر جمہوریت کے بھاشن دیتے ہیں،ا گر وزیراعلی سندھ کا پولیس پر کنٹرول نہیں تو پھروہ نااہل و نکما ہے، اسے فوری استعفی دے دیناچاہئے ،جو خاتون اپنے شوہر کوعزت نہ دے وہ ووٹ کو کیا عزت دے گی، جب ان کی پکڑ کر و تو اداروں کا رونا روتے ہیں،جب صفدر کو گرفتار کیا گیا اس وقت مریم نواز ان کے ساتھ نہیں تھیں، گیارہ مکس اچار پارٹی آٹھ ہزار بندہ کراچی میں اکٹھا نہیں کرسکی۔تجزیہ کار عارف نظامی نے کہا مزار قائد کا تقدس پامال نہیں ہونا چاہئے۔ پی ڈی ایم کا دوسرا جلسہ پہلے سے بہتر تھا، نفرت کی سیاست زیادہ دیر نہیں چلے گی ،کچھ لوگوں کا خیا ل ہے کہ اس نظام کوہی لپیٹ دیا جائے ، عملی طور پر ملک میں جمہوریت نہیں ، ایک پریشان کن ماحول میں ہم داخل ہو چکے ہیں، حکومت اور اپوزیشن میں مذاکرات کے امکانات ہیں، سب سے پہلے غداری کی سیاست کو ختم کیا جائے ، پرویز الٰہی عمران خان سے سخت ناراض ہیں ، اگر حکومت میں کہیں جھول آیا تو حکومت کا ساتھ بھی چھوڑ سکتے ہیں لیکن وہ اشارہ ملنے تک ایسا نہیں کرینگے ،کوئی تبدیلی آنے والی ہے اورا نہیں اشارہ ملے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں