بریکنگ نیوز : کپتان کے ٹائیگر فیصل واوڈا نے لاکھوں ملازمتوں کے حوالے سے وزیراعظم اور قوم کو دھماکہ خیز خوشخبری سنا دی

کراچی (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر برائے آبی منصوبہ بندی فیصل واوڈا نے کاروبار، روزگار کی فراہمی کیلئے سیلف ایمپلائمنٹ اسکیم کااعلان کردیا ہے ، سیلف ایمپلائمنٹ اسکیم کے تحت ابتدائی طور پر ایک ہزار افراد کو ذاتی اخراجات سےفنڈز دیے جائیں گے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر برائے آبی منصوبہ بندی فیصل واوڈا کا بڑا فیصلہ کرلیا

اور کاروبار،روزگار کی فراہمی کیلئےسیلف ایمپلائمنٹ اسکیم کااعلان کردیا ہے ، ابتدائی طور پر ایک ہزار افراد کو ذاتی اخراجات سےفنڈز دیے جائیں گے۔ سیلف ایمپلائمنٹ اسکیم کا آغاز آج NA 249 بلدیہ کراچی سے ہو گا، ابتدائی طور پر 3 کروڑ روپے کے چیکس تقسیم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، اسکیم پر صوبائی یا وفاقی حکومت کا کوئی پیسہ استعمال نہیں ہوگا۔ اسکیم پر خرچ ہونے والی تمام رقم فیصل واوڈا خود اور مخیرحضرات کے تعاون سے ادا کی جائے گی۔ یاد ہے دو ماہ قبل وفاقی وزیرفیصل واوڈا نے وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ کو خط لکھا تھا ، جس میں‌ حلقے کے عوام کو سہولتوں کی فراہمی کے لئے ذاتی تعاون کی پیش کش کی تھی۔ اپنے خط میں‌ انھوں‌ نے موقف اختیار کیا تھا کہ حلقے کے عوام بنیادی سہولتوں سے محروم ہیں، حلقے میں تعلیم، صحت اور صاف پانی کی عدم دستیابی بڑامسئلہ ہے، حلقہ میں مسائل کے حل کے لئے صوبائی حکومت سے تعاون پر تیار ہوں۔ وفاقی وزیر نے اسکول، ڈسپنسریوں اور آر ا و پلانٹ کا خرچہ خود اٹھانے کی پیش کش کیے تھی اور ساتھ ہی بچوں کے تعلیمی اخراجات اور علاج کی سہولتوں کا خرچ خود برداشت کرنے کی بھی پیش کش کی تھی۔ فیصل واوڈا کا کہنا تھا اخراجات کا بوجھ وفاقی اور صوبائی حکومت پرنہیں ہوگا، حلقہ کے عوام کو سہولتیں ذاتی وسائل سے فراہم کروں گا۔ دوسری جانب وفاقی وزیرفیصل واوڈا نے وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ کو خط لکھا، جس میں‌ حلقے کے عوام کو سہولتوں کی

فراہمی کے لئے ذاتی تعاون کی پیش کش کی ہے. تفصیلات کے مطابق این اے 249 سے قومی اسمبلی کی نشست جیتنے والے فیصل واوڈا نے وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ سے رابطہ کیا ہے. اپنے خط میں‌ انھوں‌ نے موقف اختیار کیا کہ حلقے کے عوام بنیادی سہولتوں سے محروم ہیں، حلقے میں تعلیم، صحت اور صاف پانی کی عدم دستیابی بڑامسئلہ ہے. انھوں نے موقف اختیار کیا کہ حلقہ میں مسائل کے حل کے لئے صوبائی حکومت سے تعاون پر تیار ہوں.وفاقی وزیر نے اسکول، ڈسپنسریوں اور آر ا و پلانٹ کا خرچہ خود اٹھانے کی پیش کش کی ہے، ساتھ ہی انھوں ‌نے بچوں کے تعلیمی اخراجات اور علاج کی سہولتوں کا خرچ خود برداشت کرنے کی بھی پیش کش کی.فیصل واوڈا نے کہا کہ اخراجات کا بوجھ وفاقی اور صوبائی حکومت پرنہیں ہوگا، حلقہ کے عوام کو سہولتیں ذاتی وسائل سے فراہم کروں گا.وفاقی وزیر فیصل واوڈا نے لکھا کہ وزیراعلیٰ سندھ عوامی مفاد کے پیش نظر مجھے وسائل کے استعمال کی اجازت دیں. ترجمان وزیراعظم نے وفاقی وزیر فیصل واوڈا سے متعلق خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا زیرگردش اطلاعات بے بنیاد ہیں، غیر ذمہ دارانہ اطلاعات کی ترویج سےگریز کیاجائے۔ ترجمان وزیراعظم نے وفاقی وزیر فیصل واوڈا سے متعلق زیرگردش خبروں کو حقائق کے منافی قرار دیتے ہوئے کہا وزیر اعظم نے کوئی نوٹس لیانہ ہی فیصل واوڈاکو ہدایات دی گئیں، غیرذمہ دارانہ اطلاعات کی ترویج سےگریزکیاجائے۔ خیال رہے یہ خبریں گردش کررہی تھیں کہ وزیراعظم نے اعلیٰ سطحیٰ اجلاس میں وزیر فیصل واوڈا کے ایل اوسی کے دورے پر ناپسندیدگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا شکر ہے آپ پستول لیکر ایل او سی کراس نہیں کرگئے اور تنبیہ کی سوشل میڈیا پر ایسی تصاویر لگانا مناسب نہیں۔ واضح رہے کہ 27 فروری کو پاکستان نے فضائی حدود کی خلاف ورزی پر بھارت کےدو طیارے مارگرائے تھے، جس کے بعد وفاقی وزیر فیصل واوڈاکنٹرول آف لائن پر پہنچے اور تباہ شدہ تباہ شدہ بھارتی طیارے پر پاکستان کا پرچم لہراتے ہوئے تصاویر بنوائیں۔ وفاقی وزیر فیصل واوڈا نے تصاویر سوشل میڈیا پر بھی شیئر کیں، جو وائرل ہوگئیں تھیں۔ خیال رہے اس سے قبل چینی قونصلیٹ پر حملے کے موقع پر بھی وفاقی وزیر فیصل واوڈا بلٹ پروف جیکٹ پہن کر اپنا اپنا پستول اُٹھائے وقوعہ پر پہنچ گئے تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں