بریکنگ نیوز: لندن میں پاکستانی ارکان پارلیمنٹ کی موجودگی میں 2 گینگز میں تصادم، اندھا دھند فائرنگ ، تشویشناک اطلاعات موصول

لندن ( ویب ڈیسک ) لندن کے ہوٹل میں پارٹی کے دوران 2 گینگز میں جھگڑے پر گولیاں اور چھریاں چل گئیں، تاہم ہوٹل میں موجود 3 پاکستانی ارکان پارلیمنٹ محفوظ رہے۔ تفصیلات کے مطابق پاکستانی ارکان پارلیمنٹ کی ٹیم انٹرپارلیمنٹری ورلڈکپ کھیلنے کے لئے لندن گئی ہوئی ہے ،پاکستانی ارکان پارلیمنٹ کی ٹیم نے

فائنل میں بنگلہ دیش کو شکست دے کر ورلڈ کپ اپنے نام کرلیا ہے ،پاکستانی ارکان پارلیمنٹ کی ٹیم کی قیادت وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے بیٹے زین قریشی نے کی، پاکستانی ارکان پارلیمنٹ کی ٹیم جس میں قیام پذیر ہے وہاں پارٹی کے دوران 2 گینگز میں جھگڑے پر گولیاں اور چھریاں چل گئیں تاہم ہوٹل میں موجود 3 پاکستانی ارکان پارلیمنٹ محفوظ رہے،ہوٹل میں موجود حیدر گیلانی ،عامر سلطان اور نوید دیرومحفوظ رہے ، ہوٹل کے باہر فائرنگ اورچاقوزنی پر پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔ یاد رہے کہ اگر آپ کے ملک میں میڈیا پر لگائی جانے والی قدغن کے حوالے سے باہر ممالک میں پتا چلتا ہے تو وہاں کے میڈیا میں کچھ نہ کچھ تو ری ایکشن آنا ہی ہوتا ہے۔ ایسا ہی کچھ گزشتہ روز ہوا۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی لندن گئے ہوئے تھے جہاں انہوں نے ایک میڈیا کانفرنس میں گفتگو کرنا تھی۔ جہاں ان کے استقبال میں بلکہ ان کی گفتگو سننے کے لیے کوئی بھی نہ آیا سوائے چند صحافیوں کے۔ ان چند صحافیوں نے شاہ محمود قریشی کی خالی کرسیوں سے گفتگو کرنے کی ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پر شیئر کیں جہاں دلچسپ تبصرے سننے کو ملے۔ پاکستان میں اظہار رائے کی آزادی سے متعلق خدشات پر لندن میں صحافیوں نے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کی میڈیا کانفرنس کا بائیکاٹ کردیا۔ شاہ محمود قریشی نے برطانیہ کے سرکاری دورے کے دوران لندن میں ڈیفینڈ میڈیا فریڈم کانفرنس میں شرکت کی جہاں ان کا استقبال زیادہ تر خالی کرسیوں نے کیا ۔ شاہ محمود قریشی کی میڈیا کانفرنس کا بائیکاٹ کرنے والے صحافیوں نے تقریباً ویران ہال کی ویڈیوز سوشل میڈیا پر پوسٹ کیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں