رپورٹ بنانے کے لیے کتنے پیسے لیے؟نوازشریف کی بیماری سے متعلق رپورٹ دینے والے ڈاکٹر کی شامت آگئی

اسلام آباد (ویب ڈیسک)وفاقی وزیر فواد چودھری نے کہاہے کہ نوازشریف کو بیمار کہنے والے ڈاکٹر کی انکوائری کریں، اگر نواز شریف بیمار ہیں تو ہسپتال کیوں نہیں جاتے ؟ نوازشریف بیمار ہیں تو ہسپتال جائیں ۔اے آروائی نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے فواد چودھری نے کہا کہ فوج صرف تحریک انصاف کا ادارہ نہیں

ہے بلکہ یہ تمام سیاسی پارٹیوں کا ادارہ ہے ،ن لیگ کی خواہش ہے کہ حکومت اور فوج میں وہی ہوجو ن لیگ اورفوج میں ہواہے اور پھر فوج ہماری طرف رجوع کرے ۔انہوں نے کہا کہ نوازشریف کو بیمار کہنے والے ڈاکٹر کی انکوائری کریں، اگر نواز شریف بیمار ہیں تو ہسپتال کیوں نہیں جاتے ؟ انہوں نے کہا کہ نوازشریف بیمار ہیں تو ہسپتال جائیں ، گھرمیں کھانے کھانے سے ٹھیک نہیں ہونگے ۔فواد چودھری کا کہنا تھا کہ بات یہ ہے کہ اپوزیشن کی دولڑائیاں ہیں ، ایک پیپلز پارٹی اورن لیگ کی لڑائی ہے ، پیپلز پارٹی کہتی ہے کہ ہم نے ترمیم کی اور ن لیگ نے ترمیم نہیں ہونے دی اور ن لیگ نے ہماری پیٹھ میں چھرا گھونپ دیاہے ۔انہوں نے کہا کہ دوسری لڑائی ن لیگ کے اندر ہے جیسے ایک گروپ شہبازشریف کا ہے اور ایک گروپ مریم نواز کا ہے ۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق وزیراعظم کے معاون خصوصی عثمان ڈار نے کہاہے کہ میں نے ایک دن کہا تھا کہ ان کی قیادت باہر ہوٹلوںمیں کھانا کھاتے پکڑی جائےگی اورپھریہ لوگوں کے شرمندہ کرنے پر واپس آئیں گے۔سماءنیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے عثمان ڈار نے کہا کہ میں نے ایک دن کہا تھا کہ ان کی قیادت باہر ہوٹلوں میں کھانا کھاتے پکڑی جائےگی اورپھریہ لوگوں کے شرمندہ کرنے پر واپس آئیں گے ۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی صحت اگر ٹھیک ہے توواپس آجائیں ۔ہم اپنے دل پہ ہاتھ رکھ کر کہتے ہیں کہ قوم دیکھ رہی ہے ۔عثمان ڈار کا کہناتھا کہ میں نے اور میرے لیڈر عمران خان نے ایک روپے کی کرپشن نہیں کی ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت جن منصوبوں کے فیتے کاٹ کر افتتاح کررہی ہے تو کیا ان منصوبوں پر پیپلزپارٹی اور ن لیگ کے پیسے لگے ہوئے ہیں جویہ ایسی باتیں کرتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں