خلیل الرحمان قمر پھر تنقید کی زد میں کیوں آگئے؟

Spread the love

مختلف موضوعات پر سخت مؤقف رکھنے والے معروف مصنف خلیل الرحمان قمر ایک مرتبہ پھر سے تنقید کی زد میں ہیں۔

خلیل الرحمان قمر حال ہی میں ایک مقامی نجی ٹی وی چینل کے ٹاک شو میں شریک ہوئے اور اس دوران چار شادیوں سے متعلق مباحثے کے دوران ان کی ایک خاتون سماجی کارکن اور مہمان ایلیا زہرہ سے اختلاف پر تکرار ہوگئی اور وہ شو چھوڑ کر چلے گئے۔

میزبان کی جانب سے احترام سے بات کرنے کی تاکید کرنے پر خلیل الرحمان شو چھوڑ کر چلے گئے ۔

چینل کے عملے کی جانب سے مصنف کو واپس لانے کی بھی کوشش کی گئی لیکن خلیل الرحمان قمر واپس آنے پر رضامند نہ ہوئے۔

عد ازاں سماجی کارکن ایلیا زہرہ نے بھی ٹی وی پر پیش آنے والے واقعے اور خلیل الرحمان کے لب ولہجے کے متعلق ٹوئٹ کی۔

ایلیا زہرہ کے مطابق خلیل الرحمان نے ان کے لیے ’را‘ کا ایجنٹ اور غیر اخلاقی لفظوں کا استعمال کیا۔

ایلیا کی ٹوئٹ کے بعد ٹوئٹر پر خلیل الرحمان قمر کے خاتون کے لیے استعمال کیے گئے نامناسب لب ولہجے کے خلاف رد عمل کا اظہار کیا جارہا ہے۔

ایک صارف کا مصنف پر تنقید کرتے ہوئے

ایک صارف کا مصنف پر تنقید کرتے ہوئے کہنا تھا کہ خلیل الرحمان کو کچھ آداب سیکھنے چاہئیں لیکن مجھے لگتا ہے کہ ان کے پاس اس سوال کا جواب نہیں ہے۔

ایک صارف نے ایلیا کی حمایت کرتے ہوئے ٹوئٹ پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے لکھا کہ مجھے افسوس ہے کہ آپ کو اس صورتحال کا سامنا کرنا پڑا لیکن درحقیقت مجھے خوشی ہے انہیں شو سے جانا پڑا، کتنا بیوقوف آدمی ہےحتیٰ کہ انہیں گفتگو کے لیے بلایا ہی کیوں جاتا ہے ان چینلز کو تنازعات کی تلاش رہتی ہے۔

طوبیٰ نامی ایک صارف کا کہنا تھا کہ اس شخص کو ٹاک شو میں آنے کی اجازت کیوں دی جاتی ہے؟

خیال رہےکہ یہ پہلا موقع نہیں ہے کہ جب معروف مصنف خلیل الرحمان قمر اپنے سخت لب و لہجے کی وجہ سے تنقید کی زد میں ہیں۔

انہوں نے گزشتہ برس بھی نجی ٹی وی کے پروگرام میں سماجی کارکن ماروی سرمد کے ساتھ عورت مارچ کے معاملے پر بحث کے دوران سخت گفتگو کی تھی جس پر انہیں سوشل میڈیا پر بھی شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

And when you wake up in the middle of a dream you can go back to sleep and it continues. cialis 20mg Weird stuff.

اپنا تبصرہ بھیجیں