افغانستان میں دہشتگردوں کے نیٹ ورک توڑنے کی ضرورت ہے،ناصر خان جنجوعہ

اسلام آباد (ہاٹ لائن) پاکستان نے کوئٹہ میں دہشتگردانہ حملہ میں بھارتی اور افغانستان کی خفیہ ایجنسیوں کے دہشتگردوں سے رابطہ بارے امریکہ کو اگاہ کر دیا۔ قومی سلامتی کے مشیر لیفٹیننٹ جنرل (ر) ناصر خان جنجوعہ سے امریکہ کے سفیر ڈیوڈ ہیل نے ملاقات کی جس میں پولیس ٹریننگ کالج کوئٹہ میں دہشت گردی کے حملہ ، انسداد دہشت گردی آپریشن اور کراس بارڈر حملوں کے امور زیر غور آئے۔ امریکہ کے سفیرڈیوڈ ہیل نے پولیس ٹریننگ کالج کوئٹہ میں دہشت گردی کے حملہ کی شدید مذمت کی اور اس ضمن میں ہر ممکن تعاون کی پیشکش کی ۔ قومی سلامتی کے مشیر لیفٹیننٹ جنرل (ر) ناصر خان جنجوعہ نے قومی ایکشن پلان کے ذریعہ پاکستان کی مجموعی سکیورٹی کو بہتر بنانے کی کوششوں کے حوالہ سے تفصیلی بریفنگ دی۔ انہوں نے این ڈی ایس اور راءکی قیادت میں افغانستان میں قائم دہشت گردوں کے نیٹ ورک کو توڑنے کی ضرور پر زور دیا۔ انہوں نے بتایا کہ پولیس ٹریننگ سینٹر کوئٹہ میں حملہ کرنے والے دہشت گرد مسلسل افغانستان میں اپنی قیادت کے ساتھ رابطہ میں تھے پاکستان کو اس حوالے سے امریکہ کے تعاون کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ افغانستان میں امن پاکستان میں امن سے براہ راست منسلک ہے۔