آرمی چیف اور وزیراعظم کی موجودگی میں بھارتی سرحد کے قریب پاک فضائیہ اور بری فوج کی مشترکہ مشقیں

بہا ولپور(ہاٹ لائن)بھارت کیساتھ سرحد کے قریب خیر پور ٹامی والی میں پاک فضائیہ اور بری فوج کی مشترکہ مشقیں رعد البرق جاری ہے جس کا معائنہ وزیراعظم اور تینوں مسلح افواج کے سربراہان سمیت دیگر سول اور عسکری قیادت نے کیا، ۔مشقوں میں بھاری آرٹلری ،ٹینک اور لڑاکہ طیاروں نے حصہ لیا اور کامیابی کے ساتھ اپنے ٹاسک پورے کیے جس سے بھارت کو بھی پاک فوج کی پیشہ وارانہ تیاریوں کا دوٹوک پیغام مل گیا۔ میڈ یا رپورٹس کے مطابق رعد البرق نامی مشقوں کا معائنہ کرنے کے لیے وزیراعظم نواز شریف ،آرمی چیف جنرل راحیل شریف ،مشیر قومی سلامتی نا صر جنجوعہ ،وزیر دفاع خواجہ آصف ،وزیر خزانہ اسحاق ڈار ،اسپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق ،چیئر مین جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی جنرل راشد محمود،سربراہ پاک فضائیہ ائیر چیف مارشل سہیل امان اور نیول چیف ایڈ مرل ذکا اللہ سمیت دیگر سول اور عسکری حکام نے شرکت کی۔مشقوں کا معائنہ کرنے کے لیے مختلف ممالک کے سفیر اور سعودی مسلح افواج کے ڈپٹی چیف آف اسٹاف بھی تقریب میں شریک ہوئے ۔ اس موقع پر لیفٹیننٹ جنرل ندیم اشفاق نے شرکا کو مشقوں میں استعمال ہونے والے مختلف ہتھیاروں کے بارے میں بریفنگ دی ۔ان کا کہنا تھا کہ مشقوں کا مقصد پاک فوج کی استعداد کار اورصلاحیت میں اضافہ کرنا ہے ،رعد البرق مشقیں پاک فوج کی بے مثال صلاحیتوں کی مظہر ہیں ۔انہوں نے مزید کہا کہ جارحیت کا بھر پور جواب دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں ۔مشقوں کے دوران بھاری آرٹلری ،ٹینک اور لڑاکہ طیاروں نے حصہ لیا ۔اس موقع پر پاک فضائیہ کے لڑاکا طیاروں نے انتہائی کامیابی کے ساتھ اپنے اہداف کو نشانہ بنا یا جبکہ مشقوں میں شامل ٹینکوںاور آرٹلری نے بھی اپنے اہداف حاصل کیے ۔ یادرہے کہ بھارت گزشتہ چند ماہ سے مسلسل سرحدی حدود کی خلاف ورزی کررہا ہے جس سے سویلین آباد ی متاثر ہورہی ہے اور گزشتہ دنوں میں رات کی تاریکی میں کی گئی بزدل دشمن کی کارروائی میں سات فوجی جوان شہید ہوگئے تھے ۔ پاکستان کی فضائی اور بری افواج کی تیاریوں اور مشقوں پر بھارتی میڈیا کو آگ لگ گئی اور اسے پاکستان کی جارحیت قراردیا جارہاہے ۔