پاکستان ہاکی فیڈریشن پر قرض معاف نہیں کر سکتے ،شہریارخان

لاہور (ہاٹ لائن)چیئرمین پی سی بی شہر یارخان نے کہا ہے کہ پاکستان ہاکی فیڈریشن پر قرض معاف نہیں کیا جا سکتا اور وہ آڈٹ میں اعتراضات کے سبب رقم کی واپسی کا تقاضا کرتے رہیں گے۔ گزشتہ روز ٹیسٹ کپتان مصباح الحق کے سسر کی نماز جنازہ میں شرکت کے بعد ان کا کہنا تھا کہ پی سی بی کے آئین کے مطابق وہ کسی کا قرض معاف نہیں کرسکتے اور آڈٹ میں اعتراضات کے پیش نظر رقم کی واپسی کا تقاضا کرتے رہیں گے البتہ پی ایچ ایف ادھار واپس نہیں کرتی تو بورڈ کیا کرے۔ یاد رہے کہ سابق چیئرمین جنرل ریٹائرڈ توقیر ضیاءکے دور میں پی سی بی نے پاکستان ہاکی فیڈریشن کو ایک کروڑروپے کی رقم بطور قرض دی تھی جس کا ہاکی فیڈریشن اعتراف تو کرتی ہے مگر دینے سے انکاری ہے۔ اس سوال پر کہ دیگر ممالک کے کرکٹ بورڈز اپنی مختلف فیڈریشنز کی مدد کرتے ہیں شہریار خان کا کہنا تھا کہ پی سی بی کے آئین میں ایسی کوئی گنجائش نہیں ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ قومی ٹیم کو کپتان مصباح الحق کی کمی محسوس ہو گی تاہم امید ہے کہ اظہرعلی اچھی کارکردگی دکھائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ نیوزی لینڈ کیخلاف پہلے ٹیسٹ میں کھلاڑی کنڈیشنز سے ناواقفیت کے سبب پرفارم نہ کر سکے لیکن دوسرے ٹیسٹ میں مضبوط کم بیک کریں گے۔