ہدایت کار مہرین جبار کی فلم ’دوبارہ پھر سے‘ آج سینما گھروں کی زینت بنے گی

کراچی (ہاٹ لائن) پاکستانی ہدایت کار مہرین جبار کی فلم ‘دوبارہ پھر سے’ کی کہانی ویسی نہیں جیسی نظر آرہی تھی۔ یہ فلم ایک لڑکے حماد (عدیل حسین) کی ایک لڑکی زینب (حریم فاروق) سے ملاقات کی کہانی پر مبنی ہے، لیکن یہ اتنا آسان نہیں جتنا نظر آرہا ہے۔ حماد اور زینب اپنے دوستوں ثمن اور واسع (صنم سعید اور علی کاظمی) کے گھر ایک پارٹی کے دوران ملتے ہیں، زینب اور عاصم (شاز خان) کی شادی ہوچکی ہوتی ہے لیکن زینب عاصم کے ساتھ خوش نہیں ہوتی اور ان دونوں کی طلاق ہوجاتی ہے، اس پارٹی کے آخر میں حماد، نتاشا (طوبیٰ صدیقی) کا نمبر لیتا ہے اور ان دونوں کی ملاقاتیں شروع ہوجاتی ہیں، تاہم ہوتا یہ ہے کہ طوبیٰ کے بجائے زینب حماد سے ملنا شروع کردیتی ہے اور یہیں سے فلم کی رومانوی کہانی کا آغاز ہوتا ہے، اس دوران حماد اور زینب ایک ساتھ رہتے ہیں، بعد ازاں لڑائی کے بعد ایک دوسرے سے الگ ہوجاتے ہیں تاہم پھر ایک دوسرے کے ساتھ کے لیے کئی مشکلات کا سامنے کرتے ہیں۔ فلم ‘دوبارہ پھر سے’ ایک ایسے انداز میں آگے بڑھی جسے دیکھ کر کہانی کا بہت حد تک اندازہ لگایا جاسکتا تھا اور یہ کہنا غلط نہیں ہوگا کہ فلم کے آخر میں ایک یا دو لائنوں میں اس کی تشریح کی جاسکتی تھی، تاہم ایسا کرنا غلط ہوگا کیوں کہ فلم میں بہت سے لمحات نہایت خوبی سے پیش کیے گئے، جو کہانی کو مزید بہتر بناتے نظر آئے۔ اس فلم کی سب سے خاص بات اس کی کہانی تھی جس میں پیار اور شادی کو مصنف بلال سمیع نے نہایت خوبصورت انداز میں پیش کیا۔ ہر دوسری فلم اور ڈرامے کی طرح اس فلم میں زینب کی ازدواجی حیثیت کو مسئلے کے طور پر پیش نہیں کیا گیا اور نہ ہی مہرین جبار نے ایک بار بھی کسی انٹرویو میں ایسا کہا کہ یہ فلم ایک طلاق یافتہ خاتون کے بارے میں ہے، بہت سے اور لوگوں کی طرح زینب کی بھی طلاق ہوچکی تھی، لیکن یہ اس کے لیے کوئی بڑا مسئلہ نہیں تھا، اس فلم نے کامیابی سے اس خیال کو پیش کیا کہ طلاق ہونے کے بعد بھی زندگی اور پیار کی جگہ رہتی ہے۔ فلم میں شائقین کے لیے نہایت خوبصورت مناظر اور میوزک پیش کیا گیا، ان گانوں نے 2 گھنٹوں کی فلم کو کافی بہتر پیش کیا، اس کا اسکرپٹ بھی کافی بہتر انداز میں لکھا گیا۔
‘دوبارہ پھر سے’ پاکستان میں ایک بہتر وقت پر ریلیز ہو رہی ہے، جب سینما اپنی اہمیت کو آہستہ آہستہ حاصل کررہا ہے اور یقیناً شائقین کے لیے یہ ایک اچھا موقع ہوگا۔ فلم جمعہ 25 نومبر سے سینما گھروں کی زینت بنے گی۔