ٹرمپ نے اپنی ویب سائٹ پر مسلمانوں کے خلاف بیان دوبارہ پوسٹ کر دیا

نیو یارک (ہاٹ لائن ) امریکی صدر منتخب ہونے کے فوری بعد ڈونلڈ ٹرمپ نے دوبارہ مسلمانوں کے خلاف زہر اگلنا شروع کر دیا اور مسلمان مخالف بیانات کو ایک مرتبہ پھر اپنی ویب سائٹ پر اپ لوڈ کردیا اور اس کا لنک بھی سوشل میڈیا پر شیئرکردیا۔ ڈونلڈ ٹرمپ کی آفیشل ویب سائٹ پر مسلمانوں پر مکمل پابندی کی تجویز کے حوالے سے بیان کو دوباہ پوسٹ کر دیا گیا ہے ، یہ بیان ایک رو ز پہلے ہی ویب سائٹ سے ہٹایا گیا تھا جسے آج دوبارہ پوسٹ کر دیا گیا ہے ۔ڈونلڈ ٹرمپ کی ویب سائٹ پر یہ بیان امریکی صدارتی انتخابات سے ایک روز پہلے تک پوسٹ تھا جسے ووٹنگ والے روز ایک سازش کے تحت ہٹایا گیا تھا تاہم اب دوبارہ اس بیان کو ویب سائٹ پر پوسٹ کر دیا گیا ہے ۔ڈونلڈ ٹرمپ نے پچھلے سال دسمبر میں سوشل میڈیا پرغیر ملکیوں کے حوالے سے اپنے ایجنڈے کو بیان کرتے ہوئے اسی قسم کا متنازع بیان دیاتھا ۔ ڈونلڈ ٹرمپ کا خیال ہے کہ امریکا میں مسلمانوں کے داخلے پراس وقت تک مکمل پابندی ہونی چاہئیے جب تک امریکی نمائندے ملکی حالات کا پوری طرح جائزہ نہ لے لیں ۔ ٹرمپ کے اس موقف پر ہیلری کلنٹن سمیت امریکی سیاسی شخصیات اور عوام کی جانب سے شدید تنقید کا نشانہ بھی بنایا گیا ۔