doctor R.B sinha

بھارت: ڈاکٹر کو اپنے زندہ ہونے کا یقین دلانے کے لئے پریس کا نفرنس کرنا پڑی

نئی دہلی (ہاٹ لائن)انڈیا میں ایک ڈاکٹر کو اس لیے پریس کانفرنس منعقد کرنا پڑی تاکہ اپنے زندہ ہونے کا لوگوں کو یقین دلا سکیں۔ان کے بارے میں افواہیں تھی کہ ملک میں کالے دھن کے خلاف جاری سرکاری مہم کے دوران ان کے مکان پر چھاپے کے نتیجے میں ہلاک ہو گئے۔
آر بی سنہا نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ میری ساکھ کی دھجیاں بکھیر دی گئیں اور افواہیں پھیلائی گئیں کہ ٹیکس حکام کے چھاپے کے دوران دل کا دورہ پڑنے کی وجہ میری جان چلی گئی۔منگل کو مقامی میڈیا نے کہا تھا کہ ریاست بہار کے ضلع چھاپرا میں واقع 65 سالہ ڈاکٹر سنہا کے مکان پر انکم ٹیکس حکام نے چھاپہ مارا کیونکہ وہاں چھ کروڑ روپے غیر قانونی طور پر رکھے گئے تھے۔ڈاکٹر سنہا کے مطابق یہ معلومات بالکل بے بنیاد ہیں اور یہاں تک کہ ایک مقامی ٹی وی چینل کا نامہ نگار اور کمیرہ مین گھر کے باہر پہنچ گیا اور وہاں فوٹیج بھی بنائی اور اس کے بعد سوشل میڈیا اور ویٹس ایپ پر خبریں جنگل میں آگ کی طرح پھیل گئیں۔صورتحال اس وقت مزید خراب ہو گئی جب ضلع میں یہ افواہیں پھیلنا شروع ہو گئیں کہ انکم ٹیکس حکام کے چھاپے کے بعد دل کا دورہ پڑنے کے نتیجے میں میرا انتقال ہو گیا ہے۔ڈاکٹر سنہا کے مطابق انھوں نے دو ٹی وی چینلز اور ایک نیوز ویب سائٹ کو جھوٹی خبریں دینے پر قانونی کاروئی کرنے کا نوٹس بھیجا ہے۔(ا ن)