کوئٹہ ، دہشتگردوں کا حملہ ، 2 حملہ آور ہلاک،200 یرغمالی بازیاب ،1 اہلکارشہید، ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ

کوئٹہ(ہاٹ لائن)کوئٹہ کے علاقے سریاب میں واقع پولیس ٹریننگ سینٹر پر دہشت گردوں نے حملہ کردیا ہےاور ہاسٹل میں گھس کر اندھا دھند فائرنگ کردی جس کے باعث 50 افراد زخمی ہو گئے ہیں جن میں ایک ایف سی اور دو پولیس اہلکار شامل ہیں۔سیکیورٹی فورسز نے دو دہشتگردوں کو مار گرایا ہے جبکہ200سے زائد یرغمالیوں کو بازیاب کروا لیا ہے تاہم دہشتگردوں کیخلاف آپریشن جاری ہے۔ ابھی تک کسی قسم کے جانی نقصانات کی اطلاعات موصول نہیں ہو ئی ہیں۔پاک فوج کی جانب سے علاقے کی ہیلی کاپٹرز کے ذریعے نگرانی کی جارہی ہے جبکہ آرمی کی مزید نفری بھی موقع پر پہنچ گئی ہے۔زیر تربیت اہلکاروں نے بتایا کہ دو دہشتگردوں نے ساڑھے 9بجے حملہ کیا ، 10کے قریب حملہ آور بعد میں داخل ہوئے، تفصیلات کے مطابق سیکیورٹی فورسز ٹریننگ سینٹر کے ہوسٹل کے کمپاونڈ میں داخل ہو گئی ہیں اور دو دہشتگردوں کو ہلاک کر دیاہے جبکہ آپریشن تاحال جاری ہے ۔پولیس کا کہناہے کہ ممکنہ طور پر دہشتگردوں کی تعداد 5 سے 6 کے درمیان ہے ۔ٹریننگ سینٹر میں700 سے زائد زیر تربیت اہلکار موجود ہیں جبکہ 200 اہلکاروں کو دہشتگردوں سے بازیاب کروا لیا گیاہے۔
quata
دہشتگردوں سے فائرنگ کے تبادلے میں 50افراد کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں جن میں پولیس کے زیر تربیت اہلکار سمیت سیکیورٹی اہلکار بھی شامل ہیں ،تمام افراد کو کوئٹہ کے سول ہسپتال منتقل کر دیا گیاہے۔ وزیر اعلیٰ بلوچستان نے بتایا کہ کوئٹہ میں حملے کی پہلے سے اطلاع موجود تھی، دہشتگردوں کو موقع نہیں ملا تو مضافاتی علاقے کو نشانہ بنایا، ڈی آئی جی کے مطابق حملہ آور ہاسٹل میں گھس کر فائرنگ کررہے ہیں،اس سینٹر میں صوبہ بھر سے آئے ہوئے ریکروٹس موجود ہوتے ہیں۔پولیس اور ایف سی کے اہلکاروں نے پوزیشنیں سنبھال لی ہیں اور دہشتگردوں کیخلاف آپریشن جاری ہے ۔صوبائی حکومت کی جانب سے کوئٹہ اور نواحی علاقوں کے تمام ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کر دی گئی ہے جبکہ تمام ڈاکٹروں کی چھٹیاں بھی منسوخ کر دی گئیں ہیں اور انہیں فوری طور پر ہسپتال پہنچنے کی ہدایات جاری کر دی گئیں ہیں ۔کوئٹہ پولیس ٹریننگ سینٹر کے ارد گرد رہائشی علاقے اور کمرشل دکانیں بھی ہیں،متاثرہ پولیس ٹریننگ سینٹر کو کالج کی حیثیت حاصل ہے۔ پولیس ٹریننگ سینٹر میں خود حملہ آور کی جانب سے خود کو دھماکے سے اڑانے کی بھی اطلاعات ہیں جس کی آواز دو دور تک سنی گئی ہے جبکہ عینی شاہدین کا کہناہے کہ ٹریننگ سینٹرمیں وقفے وقفے سے تین دھماکے بھی سنے گئے ہیں۔دہشتگردوں کی جانب سے سیکیورٹی فورسز پر کریکر بھی پھینکے گئے جس کے باعث آگ بھڑک اٹھی ،سیکیورٹی فورسز کی جانب سے شہر بھر کی فائر بریگیڈز کو بھی موقع پر طلب کر لیا گیاہے جبکہ آگ پر قابو بھی پا لیا گیاہے۔