ٹریننگ مکمل ہونے کے باوجود ریکروٹس کو گھروں سے واپس بلایا گیا ،انکشاف

کوئٹہ (ہاٹ لائن ) پولیس ٹریننگ کالج میں دہشت گردوں کے حملے میں زخمی ہونیوالے ریکروٹس نے بتایا کہ انکی ٹریننگ مکمل ہوچکی تھی اور وہ ایک بار گھروں کو جاچکے تھے ،15روز پہلے انہیں اعلی پولیس حکام نے دوبارہ کالج میں طلب کیا اس دن سے نہ تو ہماری ٹریننگ ہورہی تھی اور نہ ہیں کہیں ڈیوٹی پر لگایا گیا۔ دنیا ٹی وی کے مطابق ریکروٹس کا کہنا ہے کہ وہ آپس میں نجی طور پر یہ سوچ رہے تھے کہ شاید انہیں اسلام آباد کے دھرنے کیلئے بلایا گیا ہے ،دریں اثناء دنیا ٹی وی نے یہ انکشاف بھی کیا ہے کہ آئی جی بلوچستان نے 6ستمبر کو وزیر اعلی بلوچستان سے درخواست کی تھی کہ ٹریننگ کالج کی دیواریں اونچی ہونی چاہئے مگر ڈیڑھ مال گزرنے کے باوجود اس پر کان نہیں دھرا گیا۔واضح رہے کہ ٹریننگ کالج کی بیرونی دیوار صرف پانچ فٹ اونچی اور جگہ جگہ سے ٹوٹی ہوئی تھی۔نیشنل ایکشن پروگرام کے تحت پورے ملک میں سرکاری اور نجی سکولوں کی دیواریں اونچی کرائی گئیں مگر نشاندہی کے باوجود پولیس ٹریننگ سنٹر کوئٹہ کی طرف کسی نے دھیان نہ دیا۔
whatsapp-image-2016-10-26-at-10-58-13-am