اونٹ پہاڑ کے نیچے آ چکا ،عوام حکمرانوں کا احتساب چاہتے ہیں ‘عبدالعلیم خان

لاہور (ہاٹ لائن )تحریک انصاف سنٹرل پنجاب کے صدر عبدالعلیم خان نے کہا ہے کہ کرٹ حکمرانوں کی قربانی میں ہی 20 کروڑ عوام اور پاکستان کی خوشحالی ہے ، عمران خان اور پی ٹی آئی کے ورکرز کی جدوجہد کے نتیجہ میں اب اونٹ پہاڑ کے نیچے آ چکا ہے۔ 20 کروڑ عوام کرپٹ حکمرانوں کا کڑا احتساب چاہتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے یوم تشکر کے عظیم الشان جلسے کیلئے نمایاں خدمات سرانجام دینے والے کارکنوں سے خطاب کے دوران کیا۔ عبدالعلیم خان نے کہا کہ عمران خان اور پی ٹی آئی کے کارکنوں کی عظیم جدوجہد سے خوفزدہ ہو کر کرپٹ حکمران خود احتساب کے شکنجے میں پھنس چکے ہیں ‘ اب بکرے جتنے مرضی ترلے ‘ منتیں کریں یا پاﺅں پڑیں قربانی یقینی ہو چکی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ عدالتوں کی عزت اور احترام کرنے کا جعلی ڈنڈورا پیٹنے والے حکمران اب لیت و لعل سے کام لینے کیلئے تاخیری حربے استعمال کر رہے ہیں لیکن اب اعلیٰ عدلیہ ‘ 20 کروڑ عوام ‘ سول سوسائٹی ‘ میڈیا سمیت پوری دنیا دیکھ رہی ہے کہ کون اداروں اور عدلیہ کا احترام کرتا ہے اور کون ملکی سلامتی کے اداروں اور اعلی ٰ عدلیہ کا مذاق اڑاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کی قیادت میں ایک خوشحال ‘ پرامن اور کرپشن سے پاک پاکستان کیلئے جدوجہد کرنے والے عظیم کارکن ہمارے ماتھے کا جھومر ہیں اور ان عظیم کارکنوں کی جدوجہد کی بدولت با اثر اور کرپٹ مافیا کا احتساب ہو چکا ہے اور پوری قوم بہت جلد اس کے اثرات محسوس کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی جدوجہد کے نتیجہ میں اب عوام نے فیصلہ کر لیا ہے کہ کرپشن اور پانامہ زدہ قیادت اور پاکستان اکٹھے نہیں چل سکتے۔ انہوں نے کہا کہ ابھی تو تلاشی کا آغاز ہوا ہے جب تلاشی کا عمل مکمل ہو گا تو پوری قوم یہ جان کر حیران رہ جائے گی کہ قومی مجرموں نے اس ملک اور قوم کو کس قدر لوٹا تھا ۔عبدالعلیم خان نے مزید کہا کہ دانیال چوہدری اور طلال چوہدری کو دھمال ڈالنے کا کوئی فائدہ نہیں ہوا اور دوبارہ میاں صاحب نے انہیں وزارت کے قابل نہیں سمجھا تحریک انصاف اور عمران خان کے خلاف دن رات پراپیگنڈہ بھی اُن کی وفاداری ثابت نہیں کر سکا وزارت نہ ملنے پر اُن دونوں سے اظہار ہمدردی ہے اور امید ہے کہ وہ دونوں توبہ کرتے ہوئے اسی تنخواہ پرمزید کام کرنے سے انکار کر دیں گے اور عوام کو گمراہ کرنے کی روش چھوڑ دیں گے ۔