میجر کی شہادت …. پاک فوج نے پورا بازار ہی اڑا دیا

ڈیرہ اسماعیل خان (ہاٹ لائن ) پاک فوج نے وانا میں میجر کی شہادت پر سزا کے طورپر پورا بازار ہی دھماکے سے اڑادیاجس کی حکام اور مقامی رہائشیوں نے تصدیق کرتے ہوئے بتایاکہ جمعہ کو ڈائنامائیٹ کے ذریعے ایجنسی ہیڈکوارٹر وانا کی رستم بازار مارکیٹ کواس ہفتے کے اوائل میں ہونیوالے دھماکے میں ایک آرمی افسر کی شہادت اور کئی اہلکاروں کے زخمی ہونے پر مقامی قانون کے تحت سزا کے طورپر اڑادیاگیا۔ انگریزی جریدے’ڈان‘ کے مطابق جنوبی وزیرستان کے پولیٹیکل ایجنٹ ظفرالاسلام خٹک نے بتایاکہ یہ اقدام فرنٹیئرکرائم ریگولیشن (ایف سی آر)کی شق اجتماعی اور علاقائی ذمہ داری کے تحت اٹھایاگیا۔برطانوی راج کے دوران ان علاقوں میں پختون آبادی کو کنٹرول کرنے اور اپنی رٹ قائم رکھنے کیلئے ایف سی آر وضع کیاتھا۔المحب مارکیٹ میں رواں ہفتے ایک سرچ آپریشن کے دوران دھماکے سے میجر عمران شہید اور 10اہلکار زخمی ہوگئے تھے جس کے بعد وانا بازار میں کرفیو لگادیاگیا اور 6000سے زائد دکانیں بند ہوگئیں۔
مقامی ذرائع نے بتایاکہ وانا بازار سیکیورٹی فورسز کے کنٹرول میں تھا اور مقامی رہنماﺅں کی طرف سے جرگے کے ذریعے کسی نتیجے پر پہنچنے میں ناکام رہے ۔ مارکیٹ کے مالک علی وزیر نے بتایاکہ دومنزلہ عمارت کو دھماکے سے اڑانے کی وجہ سے انہیں شدید مالی نقصان ہوا، پورے ملک میں دھماکے ہورہے ہیں لیکن کہیں بھی سزا کے طورپر ڈائنامائیٹ سے مارکیٹوں کو نہیں اڑایاجاتا۔