سپریم کورٹ نے عمران خان اورجہانگیرترین کو نوٹس جاری کردیا

اسلام آباد ( ہاٹ لائن ) وزیراعظم نوازشریف کیخلاف پاناما لیکس سے متعلق اہم ترین درخواستوں کی سماعت تو سپریم کورٹ میں جاری ہے۔ اب کپتان اورجہانگیر ترین کی آف شور کمپنی کا معاملہ بھی سپریم کورٹ پہنچ گیا۔ مسلم لیگ ن کہنا ہے کہ اب پندرہ نومبر سے عمران خان کی تلاشی شروع ہوگی۔
مسلم لیگ ن نے پاکستان تحریک انصاف پرجوابی وارکرتے ہوئے عمران خان اور جہانگیر ترین کی آف شور کمپنیوں کا معاملہ بھی سپریم کورٹ میں اٹھا دیا۔ ن لیگ کے رہنما حنیف عباسی کی جانب سے دائرکردہ درخواست پر سپریم کورٹ نے دونوں رہنماؤں کو پندرہ نومبر کیلئے نوٹسز جاری کر دیے۔
حنیف عباسی کے وکیل اکرم شیخ کا کہنا تھا کہ دوسروں پرانگلیاں اٹھانے سے پہلے عمران خان خود کو سامنے لائیں۔ بات صرف آف شور کمپنیوں تک محدود نہیں۔ تحریک انصاف غیرملکی امداد پر چلنے والی جماعت ہے۔چیف جسٹس نے کہا کہ آپ کی درخواستوں پر نوٹس جاری کر چکے ہیں۔ آپ دو گھنٹے بولنا چاہیں تو الگ بات ہے۔سپریم کورٹ نے معاملہ پاناما کیس سے منسلک کرنے کی استدعا مسترد کردی۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ دوسرے فریق کو سنے بغیر فیصلہ نہیں کر سکتے۔عدالت نے دونوں رہنماؤں سے پندرہ نومبر تک جواب مانگ لیا۔ درخواست گزار حنیف عباسی کہتے ہیں اب پندرہ نومبر سے عمران خان کی تلاشی شروع ہوگی۔