پاکستان نے سلامتی کونسل میں مستقل ارکان میں اضافے کی مخالفت کردی

نیویارک ( ہاٹ لائن ) اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ سلامتی کونسل میں مستقل ارکان کی تعداد میں اضافہ اقوام متحدہ کے منشور کی خلاف ورزی ہے اس سے صرف اقتدار اور طاقت کے بھوکے ممالک کو اطمینان ملے گا۔اس لئے پاکستان سلامتی کونسل میں نئے مستقل ارکان کی شمولیت کی مخالفت کرتا ہے .
ملیحہ لودھی نے مزید کہا کہ سلامتی کونسل اصلاحات میں رکاوٹ کی وجہ کچھ ریاستوں کا غیرمساویانہ رویہ ہے مفادات کی جنگ کے باعث ہی سلامتی کونسل مفلوج ہے مستقل ارکان میں اضافہ اختیارات اور طاقت کے بھوکے چند ممالک کے لئے اطمینان کا باعث ہوگا اور اس سےاقوام متحدہ کے منشور کی خلاف وزری بھی ہوگی ایسی صورتحال میں مزید ارکان کا اضافہ تشویش کا باعث ہے۔ تاہم پاکستان غیر مستقل ارکان میں اضافے کی حمایت کرتا ہے غیرمستقل ارکان کی تعداد میں اضافے سے سلامتی کونسل کا طرزعمل مزید جمہوری، قابل احتساب، شفاف اور مزید موثرہوگا۔