حب : درگاہ شاہ نورانی میں دھماکا، 30 افراد جاں بحق، متعدد زخمی

حب (ہاٹ لائن ) درگاہ شاہ نورانی میں دھماکے کے نتیجے میں ایدھی حکام کے مطابق اب تک 30 افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہوئے ہیں۔
بلوچستان کے ضلع خضدار کی تحصیل حب میں واقع درگاہ شاہ نورانی میں زور دار دھماکا ہوا جس کے نتیجے میں ابتدائی طور پر متعدد افراد جاں بحق و زخمی ہوگئے ہیں۔ نمائندہ ایکسپریس نیوز کے مطابق درگاہ شاہ نورانی میں سالانہ میلہ جاری تھا کہ اس دوران مزار کے احاطے میں دھمال کے دوران دھماکا ہوا جس کے نتیجے میں متعدد افراد جاں بحق و زخمی ہوگئے، دھماکے کے فوری بعد ریسکیو اہلکاروں نے موقع پر پہنچ کر امدادی کارروائیاں شروع کردیں اور زخمی و جاں بحق ہونے والوں کو اسپتال منتقل کیا گیا۔ انچارج ایدھی لسبیلہ حلیم لاسی نے دھما کے کے نتیجے میں 30 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کردی ہے جب کہ دھماکے میں 100 سے زائد افراد زخمی ہیں، دھماکے میں جاں بحق و زخمی ہونے والوں میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔
نمائندہ کے مطابق دھماکے کے بعد مزار میں افراتفری مچ گئی اور بھگدڑسے بھی کئی افراد زخمی ہوگئے جب کہ دھماکے کے فوری بعد حب کے تمام اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی اور دیگر شہروں سے بھی ایمبولینسز کو طلب کیا گیا ہے۔ درگاہ شاہ نورانی میں دھمال کے وقت دھماکے کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے۔
ذرائع کے مطابق قانون نافذ کرنے والے ادارے نے دھماکے کی ابتدائی تحقیقات شروع کردی ہیں جس کے بعد ہی اس بات کا تعین کیا جاسکے گا کہ دھماکا ٹائم ڈیوائس کے ذریعے کیا گیا یہ کوئی خودکش حملہ تھا۔ دوسری جانب صدر مملکت ممنون حسین اور وزیراعظم نوازشریف نے دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اس میں جاں بحق و زخمی ہونے والوں کے لواحقین سے ہمدردی کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعظم نوازشریف کا مذمتی بیان میں کہنا تھا کہ دھماکے کے ذمہ داروں کو کٹہرے میں لایا جائے۔