دشمن کی آنکھوں میں آنکھیں ڈالنے کے بجائے حکومت پی ٹی آئی کیخلاف افواہیں پھیلانے میں مصروف ہے ، عبدالعلیم خان

لاہور(ہاٹ لائن ) تحریک انصاف سنٹرل پنجاب کے صدر عبدالعلیم خان نے پاکستان حدود میں بھارت کی طرف سے آبدوز بھیجے اور بار بار لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کرنے پر پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ آئے روز کی بھارتی جارحیت قابل مذمت ہی نہیں قابل مرمت بھی ہے افواج پاکستان کی طرف سے دشمن کو عملی طور پر سخت ترین جواب دیا جا چکا ہے لیکن حکومت کی طرف سے خاموشی دشمن کو شہہ دینے کا باعث بن رہی ہے ۔عبدالعلیم خان نے پارٹی کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آئے روز بھارت تمام عالمی اور بین الملکی قوانین کی دھجیاں بکھیر رہا ہے جس سے معصوم شہریوں کا جانی و مالی نقصان بھی ہو رہا ہے ۔عبدالعلیم خان نے کہا کہ نواز شریف اینڈ کمپنی کو ملک و قوم کی بجائے اپنے کاروباری مفادات زیادہ عزیز دکھائی دیتے ہیں اسی لیے انہوں نے آج تک بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کا نام لے کر مذمت کرنے کی بھی زحمت نہیں کی۔ عبدالعلیم خان نے کہا کہ بھارت کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر جواب دینے کی بجائے حکمرانوں کو تحریک انصاف کے خلاف ڈس انفارمیشن کرانے کی زیادہ فکر لاحق ہے اسی لیے وزراءکی ٹیم روزانہ کی بنیاد پر سرکاری خرچے پر عمران خان اور ان کے ساتھیوں کے خلاف پریس کانفرنس کرنے کا “فریضہ”سر انجام دیتے ہیں۔عبدالعلیم خان نے کہا کہ ملک کو با وقار اور خود انحصار بنانے کی بجائے حکمرانوں کو اپنی تجوریاں بھرنے اور بیرون ملک زیادہ سے زیادہ اثاثے بنانے کی فکر لاحق ہے ۔انہوں نے کہا کہ افواج پاکستا ن کے جوان سرحدوں کی حفاظت کرتے ہوئے جانوں کے نذرانے پیش کر رہے ہیں جبکہ میاں صاحبان تحائف کے تبادلے اور ایک دوسرے کے دکھ سکھ میں شریک ہونے کو اولیت دے رہے ہیں ۔عبدالعلیم خان نے کہا کہ ساری قوم اپنی فوج کے شانہ بشانہ کھڑی ہے اور اگر بھارت نے جنگ مسلط کی تو پاکستان کا ہر شہری اپنی فوج کے ساتھ لڑائی میں حصہ لے گا اور دشمن کے دانت کھٹے کر دیں گے ۔دن بدن حکمرانوں کے اصل چہرے بے نقاب ہو رہے ہیں اور اس کا تمام تر سہرا عمران خان اور تحریک انصاف کے سر ہے انشاءاللہ پاناما لیکس کے معاملے میں بھی پی ٹی آئی ہی سرخرو ہو گی ۔