این اے 154لودھراں میں ضمنی الیکشن روکنے کے لیے درخواست دائر

اسلام آباد: اسلام آباد ہائی کورٹ میں جہانگیر ترین کی نا اہلی کے بعد این اے 154لودھراں میں ضمنی الیکشن روکنے کے لیے درخواست دائر کر دی گئی۔

درخواست گزارشاہد اورکزئی نے موقف اختیار کیا ہے کہ آئین کے آرٹیکل224 کے تحت قومی اسمبلی کی نشست پر آخری 4 ماہ میں انتخابات نہیں ہو سکتے، این اے120کے کامیاب امیدوار نے کامیابی کے 100 دن بعد بھی حلف نہیں اٹھایا، این اے 120 کے انتخابات سے عوام کے پیسے کا ضیاع کیا گیا، نااہل ممبراسمبلی کے پاس نظرثانی درخواست کا اختیار ہے اور بحال ہو سکتا ہے۔

اگر جہانگیر ترین بحال ہو گئے تو انتخاب کالعدم قرار پائے گا، قومی اسمبلی31مئی2018 میں اپنی مدت پوری کرے گی، قومی اسمبلی کے 2 اجلاسوں کے درمیان 120 دن کا وقفہ ہوتا ہے، لہذا 12 فروری کے ضمنی الیکشن کا کامیاب امیدوار قومی اسمبلی نشست کا حلف بھی نہیں لے سکے گا، درخواست میں الیکشن کمیشن کو فریق بنایا گیا ہے۔