hotliennews

وزیر اعلیٰ سندھ کا حکومت سے کالعدم تنظیم ٹی ایل پی سے مذاکرات پر اعتماد میں لینے کا مطالبہ

کراچی(ہاٹ لائن نیوز)‌وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے حکومت سے کالعدم تنظیم تحریک لبیک پاکستان سے مذاکرات پر اعتماد میں لینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ مشورہ ہےکوئی ایسی آفرنہ کریں جوپوری کرنہ سکیں۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا نیب ریفرنس کی وجہ سے حکومت سندھ کے پیسے رکےہیں، 5 تاریخ کوہمیں پھربلایا گیا ہے۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ این سی اوسی کی میٹنگ میں درخواست کی تھی انٹرسٹی ٹرانسپورٹ بندکریں،ایس اوپیز کے تحت کاروبارکرسکتےہیں، کل کوروناسے150اموات ہوئی ہیں، محکمہ سندھ نےبتایاہمارےیہاں بھی کیسزبڑھ رہے ہیں، این سی اوسی میں میری بات نہیں مانی گئی۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ کل لاہورمیں جوکچھ ہواتفصیلات مجھےنہیں پتہ، مفتی منیب نےہڑتال کااعلان کیا،ہم رات سے ہی سب سےرابطےمیں تھے، پرامن احتجاج سےہم نہیں روکیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ ناموس رسالتﷺ پرکوئی سمجھوتہ نہیں ہے، ناموس رسالتﷺپرہمارےجذبات کسی سےبھی کم نہیں، وزیرداخلہ کاس حری کےوقت بیان آیاکہ بات چیت چل رہی ہے، صوبوں کواعتمادمیں نہیں لیاگیا، صوبوں کو اعتماد میں لیں گے تو بہتر ہوگا۔