سی پیک منصوبہ ،آل پارٹیز کانفرنس فیصلوں پر عملدرآمد کیا جائے ، پرویز خٹک

پشاور(این این آئی)وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے اُمید ظاہرکی ہے کہ وزیراعظم سیاسی جماعتوں کا اجلاس بلا کر سی پیک کے حوالے سے آل پارٹیز کانفرنس میں کئے گئے فیصلوں پر عمل درآمد پر سیاسی عمائدین کو مطمئن کریں گے۔ اس سلسلے میں پیش رفت جاری ہے۔ انہوں نے کہاکہ وہ پوری کوشش کررہے ہیں کہ کرپشن کا مکمل خاتمہ کریں ۔ ہم نے مقامی حکومتوں کو با اختیار بنایا ہے۔33 ارب روپے ویلج کونسلوں کو دیئے جا چکے ہیں ۔ ویلج ، تحصیل اور ڈسٹرکٹ کونسل کو اختیارات دیئے ہیں۔ ہر ادارہ اپنے دائرہ اختیار کے مطابق کام کر رہا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے لائیو ایٹ پختونخوا ریڈیو میں لوگوں کے سوالات کے جواب اوروزیراعلیٰ ہاﺅس پشاور میں دو مختلف وفود سے گفتگو کے علاوہ ایک اعلیٰ سطح اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ صوبے میں کرپشن کے خاتمے اور عوام کو انصاف کی فراہمی کے حوالے سے ایک سوال پر وزیراعلیٰ نے کہاکہ ان کی حکومت نے صوبے میں بارگیننگ ختم کر دی ہے اور بدعنوانی کے خاتمے کیلئے احتساب ایکٹ پاس کیا ہے اور بد عنوانی کے ذریعے لوٹے گئے وسائل کی ریکوری اور سزا کا ایک قابل عمل نظام بنا یا ہے۔اس سلسلے میں وسل بلور قانو ن اہم پیش رفت ہے۔ عوامی شکایات کے ازالے اور انصاف کی فراہمی کیلئے محکمہ پولیس اور وزیراعلیٰ سیکرٹریٹ میں شکایات سیل بنائے گئے ہیں ۔ محکمہ انسداد کرپشن کی مدد سے اب تک 58 کروڑ روپے اور تقریباً ایک ارب روپے کی اراضی کی ریکوری ہو چکی ہے۔ اطلاعات اور خدمات تک عوام کی رسائی یقینی بنانے کیلئے رائٹ ٹو سروسز جیسے اہم قوانین پاس کئے ہیں۔شعبہ تعلیم میں حکومتی اصلاحات کا حوالہ دیتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہاکہ صوبے کے تقریباً1500 سکولوں میں بنیادی سہولیات فراہم کر چکے ہیںجس پر 120 ارب روپے لاگت آئی ہے۔