کراچی ،گرین لائن منصوبہ کے تحت ناظم آباد فلائی اوورگرانے کا کام شروع

کراچی (ہاٹ لائن) گرین لائن منصوبے کے لئے ناظم آباد پل کو گرانے کا کام شروع کر دیا گیا ہے جب کہ بورڈ آفس کی طرف جانے والی ٹریفک کو متبادل راستہ فراہم کر دیا گیا ہے۔ گرین لائن منصوبے کے لئے ناظم آباد پل کو گرانے کا کام شروع کردیا گیا ہے اور ہیوی مشینری کو بھی پہنچا دیا گیا ہے۔ اس حوالے سے ڈی سی سینٹرل فرید الدین کا کہنا ہے کہ پل کو ڈائنا مائٹ کے ذریعے گرایا جائے گا جب کہ پل گرانے کا کام تقریباً دو سے تین ہفتے میں مکمل ہو گا۔ ڈی سی سینٹرل کا کہنا ہے کہ پل کا ملبہ ہٹانے کے بعد تقریباً 2 سے ڈھائی مہینے میں گرین لائن بس کے لئے ٹریک کی تعمیر کا کام مکمل ہوگا۔ ناظم آباد پل کو گرانے کے لئے بورڈ آفس کی طرف جانے والی سڑک کو ٹریفک کے لئے بند کر دیا گیا ہے جب کہ نارتھ کراچی اور حیدری کی طرف سے آنے والا ٹریفک پل کےساتھ سڑک سے ناظم آباد کی طرف نکالاجائے گا۔ دوسری جانب کراچی میں ہی باغ جناح میں جاری جماعت اسلام کے ورکرز کنونشن کے باعث خداداد کالونی سے نمائش چورنگی جانے والی سڑک کو ٹریفک کے لیے بند کردیا گیا ہے، نمائش چورنگی جانے والی ٹریفک کو خداداد کالونی سے کوریڈورتھری کی طرف موڑ دیا گیا ہے۔ صوبائی وزیرٹرانسپورٹ ناصرشاہ نے ناظم آباد فلائی اوورگرانے کے کام کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پل گرانے کا کام شروع کردیا گیا ہے، گرین لائن بڑا منصوبہ ہے، پل گرانے کے باعث شہریوں کوپریشانی ضرور ہوگی لیکن کوشش ہے کہ عوام کوکم سے کم تکلیف ہو۔ ان کا کہنا تھا کہ ملحقہ آبادی کو خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے، ٹریفک پولیس نے شہریوں کے لیے متبادل روٹس بنائے ہیں۔ وزیرٹرانسپورٹ ناصرشاہ کا کہنا تھا کہ منصوبہ مقررہ وقت میں مکمل ہوگا، پہلے مرحلے میں ایک ٹریک جب کہ دوسرے مرحلے میں دوسرا ٹریک گرایا جائے گا اوراس عمل کے دوران جدید ٹیکنالوجی کو استعمال کیا جائے گا۔